سراب ۔۔۔ حصہ اول

"گرلڈ سالمن ود پوٹیٹوز۔”
اس نے مینیو کارڈ کاسرخ فلیپ بند کر کے ویٹرس کے ہاتھ میں دیتے ہوئے کہا۔ ۔ کارڈ پہ لکھے ہوئے کھانوں میں یہ واحد ڈش تھی جو اس کے لئے شجر ممنوعہ نہیں تھی۔ دیگر تمام کھانوں میں غیر ذبیحہ گوشت یا پورک کی آمیزش تھی یا پھر ذائقہ بڑھانے کے لئے وائن ساس استعمال کی گئی تھی۔ ڈائننگ ہال کی مدہم روشنیاں آنکھوں کو بھلی لگ رہی تھیں۔ اس کی نظریں غیر ارادی طور پر ویٹرس کا پیچھا کرنے لگیں جو اب دوسری میز پر مہمانوں کی فرمائش نوٹ کرتے ہوئے ہلکی پھلکی دل لگی بھی کر رہی تھی۔ ۔ شاید انہیں خوش کرنا بھی اس کے فرائض میں شامل تھا۔ ۔ پڑھنا جاری رکھیں

Advertisements