The old man and the sea by Ernest Hemingway

The old man and the sea by Ernest Hemingway

ارنسٹ ہمنگ وے کے مشہور ناول کا اردو ترجمہ "بوڑھا اور سمندر” کے نام سے ابن سلیم نے کیا ہے۔۔۔ یہ ناول مصنف کا بہترین ناول شمار کیا جاتا ہے جس پہ اسے نوبل انعام بھی مل چکا ہے۔

سو سے کچھ زیادہ صفحات پہ مشتمل یہ کہانی ایک سے ڈیڑھ گھنٹے کی نشست میں باآسانی مکمل کی جا سکتی ہے۔ کہانی کا انداز سادہ ہے اور بنا کسی کنفیوژن کے یہ قاری کو اپنے ساتھ سفر پہ لئے جاتی ہے۔ پڑھنا جاری رکھیں

بری عورت کی کتھا از کشور ناہید

بری عورت کی کتھا از کشور ناہید

یہ حالیہ تازہ ترین کتاب ہے جو میں نے پڑھی ہے۔۔۔ یہ کشور ناہید کی اپنی آپ بیتی ہے لیکن اس کو انہوں نے کہانی سے زیادہ فلسفے کے انداز میں لکھا ہے اور حالات و واقعات کو بیان کرنے سے زیادہ ان کا تجزیہ بیان کیا ہے۔

اس میں ان کی مشکلات کا بیان ہے اور عمومی انداز میں ہمارے معاشرے میں ایک بچی سے لے کر لڑکی اور عورت تک جو مشکلات پیش آتی ہیں پڑھنا جاری رکھیں

آگے سمندر ہے از انتظار حسین


آگے سمندر ہے از انتظار حسین

مشہور مصنف انتظار حسین کا لکھا ہوا یہ پہلا ناول ہے جو میں نے پڑھا ہے۔۔۔ یہ ناول کراچی کے پس منظر میں لکھا گیا ہے۔ جس میں قیام پاکستان کے بعد کا زمانہ دکھایا گیا ہے۔۔ ناول کی خوبصورتی یہ ہے کہ جہاں یہ قیام پاکستان کے بعد ہجرت کرکے پاکستان پہنچنے والوں کی ترجمانی کرتا ہے وہیں انڈیا میں باقی رہ جانے والے لوگوں کے خیالات سے بھی آگاہی دلاتا ہے پڑھنا جاری رکھیں

کاجل کوٹھا از بابا محمد یحییٰ خان

کاجل کوٹھا از بابا محمد یحییٰ خان

لگ بھگ ساڑھے نو سو سے زیادہ صفحات پہ لکھی گئی یہ ضخیم کتاب بابا محمد یحیٰی خان کی لکھی ہوئی "پیا رنگ کالا” کا دوسرا حصہ ہے۔

جن لوگوں نے اشفاق احمد کی کتابیں پڑھی ہوں گی وہ یقیناً ان میں موجود بابوں سے واقف ہوں گے۔ بابا محمد یحییٰ خان کے تعارف کے لئے بس اتنا ہی کہ یہ اشفاق احمد کے بابوں میں سے ایک ہیں۔ پڑھنا جاری رکھیں